Breaking News

سرگودھا: بغیر لائسنس میڈیکل سٹورز کیخلاف کریک ڈاؤن‘ سخت پالیسی بنالی گئی



سرگودھا: بغیر لائسنس میڈیکل سٹورز کیخلاف کریک ڈاؤن‘ سخت پالیسی بنالی گئی
سرگودہا(عاطف فاروق ڈاٹ کام)ڈپٹی کمشنر لیاقت علی چٹھہ نے کہا ہے کہ بلالائسنس میڈیکل سٹورچلاناجرم ہے۔ میڈیکل سٹور ز پر پریکٹس کرنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی ۔ ڈرگ انسپکٹر ز کو عطائیت کیخلاف بھر پور کریک ڈاؤن کا سلسلہ
جاری رہنا چاہیے۔ ڈرگ انسپکٹر کی گزشتہ ماہ کی کاروائی قابل ستائش رہی ۔انہیں یہ سلسلہ آئندہ بھی برقرار رکھنا چاہئے ۔وہ آج ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ کے اجلاس کی صدار ت کر رہے تھے ۔ اجلاس میں چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر نصرت ریاض ‘سیکریٹری کوالٹی کنٹرول بورڈظفر اقبال اور چیف میڈیکل سپیشلسٹ ڈاکٹر ملک محمد خان اورڈسٹرکٹ ڈرگ انسپکٹر اورتحصیل ڈرگ انسپکٹرز نے شرکت کی۔ اجلاس میں 32کیس پیش ہوے جن میں سے تیرہ کیسں کی پراسیکیوشن،سو لہ کووارننگ اورتین کے دوبارہ وزٹ کی ہدایت کی۔ ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ عطائیت کی آڑ میں انسانوں کی زندگیوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی ۔ انہوں نے میڈیکل سٹورز پر غیرمعیاری، جعلی اور زائد المعیادادویات کی فروخت پر کڑی نظر رکھنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت عطائیت اور بلا لائسنس میڈیکل سٹورز کے خلاف بھرپورعز م رکھتی ہے۔ ایسے لوگ کسی رعایت کے مستحق نہیں حکومت نے غیرمعیاری ادویات کی فروخت اور کوالیفائڈ پرسن کے علاوہ کسی کو پریکٹس کرنے کے خلاف سخت پالیسی وضع کی ہے۔ پالیسی پر عمل درآمد کیلئے قانون سازی کر لی گئی ہے تا کہ ملک سے عطائیت کی حوصلہ شکنی ہو اور کوالیفائڈ لوگ بھی علاج معالجہ کی حساس ذمہ داریاں انجام د ے سکیں حکومت غیرمعیاری، جعلی اور زائدالمیعاد ادویات کی فروخت کرنے والے افراد سے نمٹنے کیلئے سزاؤں میں اضافہ کر دیا ہے۔